Connect with us

پاکستان

معیشت کریش ہونے کا خطرہ

شائع شدہ

کو

معیشت کریش ہونے کا خطرہ

وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال کا کہنا ہے کہ آئندہ عام انتخابات میں پاکستان کے مستقبل کا فیصلہ ہوگا اگر حکومت متاثر ہوئی تو گلے کا پھندا بھی بن سکتی ہے۔ نارووال میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے وفاقی وزیرِداخلہ احسن اقبال کا کہنا تھا کہ چند سال پہلے بیرونی دنیا پاکستان کوخطرناک ملک قرار دے رہی تھی، زرداری کی کرپشن کے بعد لٹا پٹا ملک ہمارے سپرد کیا گیا، دہشت گردی اور لوڈشیڈنگ ہمیں ورثے میں ملی تاہم ہم نے ملک کو ترقی کی جانب گامزن کرنے کی کوشش کی۔
وفاقی وزیرنے کہا کہ اگر معیشت مضبوط نہ ہوئی تو اسلحے کے انبار لگانا بیکار ہے، ہمیں اپنی معیشت مضبوط کرکے ملک کو مقابلے کے لئے تیار کرنا ہے، ملک میں سیاسی عدم استحکام پیدا ہوا تو معیشت کریش کرجائے گی اور اگر معیشت کریش کرگئی تو سرمایہ کاری کا بوجھ برداشت نہیں کرسکیں گے، پاکستان اس وقت دوراہے پر کھڑا ہے اور اربوں ڈالرز کے منصوبے زیرتعمیر ہیں، اب قوم نے انتخابات میں مثبت پالیسیوں کے تسلسل کا فیصلہ کرنا ہے کیوں کہ آئندہ انتخابات ملک کے مستقبل کا الیکشن ہے، اگر ایسا نہ ہوا اور حکومت تبدیل ہوگئی تو 5 سالہ کامیابیاں واپس ہوجائیں گی، حکومت کا متاثر ہونا گلے کا پھندا بھی بن سکتا ہے۔

پاکستان

جگہ جگہ تلاشی

شائع شدہ

کو

جگہ جگہ تلاشی

25 جولائی کو ہونے والے پارلیمانی انتخابات کے دوران کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے نمٹنے کے لئے کراچی میں پولیس نے بھرپور تیاریاں کرلی ہیں اس حوالے سے پولیس اہلکاروں نے پریکٹس سیشن بھی کیا جس کے دوران غیر معمولی حالات اور شرپسند عناصرسے نمٹنے کے لئے خصوصی تربیت بھی شامل تھی-

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

نئے ڈیم کا اعلان

شائع شدہ

کو

اسلام کا پرچم بلند کرنا ہوگا

مولانا فضل الرحمٰن نے کہا عوام 25 جولائی کو ایم ایم اے کا ساتھ دے کر عام انتخابات میں کتاب پر مہر لگائیں گے۔ علاقے سے جاگیرداروں کا خاتمہ کر دیا اب یہاں کوئی ظلم نہیں کرسکتا۔ گومل زام ڈیم ہماری کوششوں سے منظور ہوا تھا اس بار جیتے تو ٹانک زام ڈیم بھی منظور کرائیں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

مخالف اتحاد نیا نہیں

شائع شدہ

کو

مخالف اتحاد نیا نہیں

خورشید شاہ نے کہا جب تک عوام ساتھ ہیں کوئی پیپلز پارٹی کا کچھ نہیں بگاڑ سکتا، پختون، پنجابی، بلوچ، سندھی ہماری پہچان ہیں‌ جو ہماری پہچان کو گدھا کہتا ہے وہ سب سے بڑا گدھا ہے۔ کوئی کہتا تھا اس ملک میں بی بی نہ ہی نواز شریف آسکتا ہے مگر بی بی آئی، نواز شریف بھی آیا اور جمہوریت بھی آئی، پی پی کیخلاف کے اتحاد کوئی نئی بات نہیں آج پھر اتحاد بن گئے ہیں یہ کچھ نہیں کرسکتے- ہم نے 18 ویں ترمیم میں صوبوں کو بااختیار بنا دیا، 5 سال کا حساب دے سکتے ہیں، سیاست گالم گلوچ سے نہیں عزت سے ہوتی ہے سندھ دھرتی کیخلاف کوئی سازش کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

مقبول خبریں