Connect with us

انٹرنیشنل

خلائی اسٹیشن تباہ

شائع شدہ

کو

خلائی اسٹیشن تباہ

بیجنگ: چین کا بے قابو ہوجانے والا خلائی اسٹیشن تیانگونگ 1 آج پاکستانی وقت کے مطابق صبح 5:16 سے 5:30 کے درمیان جنوبی بحرالکاہل میں تاہیتی کے ساحل سے قریب سمندر میں گر کر تباہ ہوگیا جبکہ اس پورے واقعے میں کوئی جانی یا مالی نقصان نہیں ہوا۔اس طرح تقریباً 7 سال خلاء میں رہنے والی یہ 8 میٹرک ٹن وزنی تجربہ گاہ اپنے اختتام کو پہنچی۔ اس کی لمبائی 34 فٹ جبکہ چوڑائی 11 فٹ تھی۔یہ خلائی اسٹیشن زمینی کرہ ہوائی میں آواز سے 22 گنا زیادہ رفتار پر داخل ہوا اور فضا سے رگڑ کے باعث شدید گرم ہو کر کسی شہابِ ثاقب کی طرح جل اٹھا جبکہ ساتھ ہی ساتھ یہ کئی ٹکڑوں میں بھی ٹوٹ گیا۔ خلائی ماہرین کا کہنا ہے کہ جنوبی بحرالکاہل میں سمندر سے ٹکراتے وقت اس کے ٹکڑوں کی رفتار 27 ہزار کلومیٹر فی گھنٹہ نوٹ کی گئی۔
واضح رہے کہ تیانگونگ 1 اس چینی خلائی منصوبے کا حصہ ہے جس کے تحت انسان بردار خلائی اسٹیشن کو 2022ء تک مدار میں پہنچایا جائے گا۔ یہ تجربہ گاہ 2011 میں زمین کے گرد نچلے مدار میں بھیجی گئی تھی اور 2013 تک اس نے اپنا مشن مکمل کرلیا تھا جس کے بعد اس کی زمین پر واپسی تیاریاں شروع کردی گئی تھیں۔ 2016 میں تیانگونگ 1 کا زمین سے رابطہ منقطع ہوگیا اور اسے زمینی اسٹیشن سے قابو میں رکھنا ممکن نہیں رہا۔ اس بات کے پیش نظر چین نے دسمبر 2017 میں اقوامِ متحدہ کو باضابطہ طور پر مطلع کردیا کہ یہ خلائی جہاز مارچ 2018 کے اختتام تک زمین سے ٹکرا سکتا ہے۔

انٹرنیشنل

ایرانی راز چوری

شائع شدہ

کو

ایرانی راز چوری

ایران کے جوہری رازوں تک اسرائیلی خفیہ ایجنسی ’’موساد ‘‘ کے رسائی اور کارروائی کے نتیجے میں ہزاروں دستاویزات کے کامیابی سے اِفشا ہونے کی تفصیلات امریکا کے 3 اخبارات کے ذریعے منظر عام پر آنا شروع ہو گئیں۔ اسرائیل نے ان اخبارات کو فراہم کردہ تفصیلات میں بتایا اْس کی انٹیلی جنس کے ایجنٹوں نے کس طرح یہ کارروائی کی۔ اسرائیلی ایجنٹوں نے رواں برس 31 جنوری کو ایرانی دارالحکومت تہران کے ایک تجارتی علاقے میں واقع گودام میں دراندازی کی اور وہاں 6 گھنٹے 29 منٹ گزارے۔ اس دوران انہوں نے وارننگ الارم سسٹم کو معطّل کیا، دو مرکزی دروازوں کو عبور کیا، 32 بڑی تجوریوں کو کھولا اور قیمتی خزانہ لے کر وہاں سے باہر نکل آئے۔

پڑھنا جاری رکھیں

انٹرنیشنل

بھوک ہڑتال

شائع شدہ

کو

بھوک ہڑتال

انسانی حقوق کی تنظیم کلب برائے اسیران کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں بتایا گیا کہ صہیونی انتظامیہ کی طرف سے انتظامی حراست کی ظالمانہ پالیسی کے خلاف 4 فلسطینیوں نے بہ طور احتجاج بھوک ہڑتال جاری رکھی ہوئی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق 43 سالہ حسن شوکہ کا تعلق غرب اردن کے جنوبی شہر بیت لحم سے ہے۔ وہ 44 روز سے مسلسل بھوک ہڑتال جاری رکھے ہوئے ہیں اس کے علاوہ 3 دیگر فلسطینی بیت لحم ہی کے اسلام جواریش اور محمود عیاد اور الخلیل کے شمالی قصبے بیت امر کے عیسی عوض نے بھی انتظامی حراست کے تسلسل کے خلاف بہ طور احتجاج بھوک ہڑتال شروع کر رکھی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

انٹرنیشنل

براہ راست مذاکرات مسترد

شائع شدہ

کو

براہ راست مذاکرات مسترد

امریکا اور طالبان قیادت کے براہ راست مذاکرات کے امکان کو مسترد کرتے ہوئے افغانی حکومت نے کہا مذاکرات میں کوئی بھی پیش رفت افغان حکومت کی شمولیت کے بغیر ممکن نہیں۔ تاہم امریکا امن مذاکرات میں سہولت کار کا کردار ادا کرسکتا ہے۔ دوسری جانب افغانستان میں موجود نیٹو اتحاد نے بھی امریکا اور طالبان کے براہ راست مذاکرات کی خبروں کو مسترد کر دیا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

مقبول خبریں