Connect with us

پاکستان

کوئی مستقبل نہیں

شائع شدہ

کو

کوئی مستقبل نہیں

پاکستان اکانومی واچ کے صدر ڈاکٹر مرتضیٰ مغل نے کہا کہ نئے ڈیم بنائے بغیر پاکستان اور اسکی معیشت کا کوئی مستقبل نہیں، صنعتی شعبہ کی بھاری اکثریت کا سب سے بڑا خرچہ توانائی کا بل ہوتا ہے جس میں کمی نہ ہو تو پیداوار مہنگی اوربرآمدات مشکل ہو جاتی ہیں۔ برآمدات بڑھانے کیلئے حکومت کو بار بار مداخلت کرنا پڑتی ہے تاہم اسکے اعلان کردہ پیکیجز کا کوئی خاص فائدہ نہیں ہوتا، ملکی ترقی کیلئے سستی توانائی کا حصول ضروری ہے جو ڈیموں کے بغیر ممکن نہیں ہے، گزشتہ روزڈاکٹر مرتضیٰ مغل نے ایک بیان میں کہا کہ جس ملک میں پیداواری لاگت زیادہ ہو وہاں کی برآمدی صنعت لازماً مشکلات کا شکار ہو گی،ایسے ملک میں ملکی و غیر ملکی بزنس مین سرمایہ کاری سے گریز کرتے ہیں جس سے روزگار کے مواقع اور محاصل کی صورتحال پر منفی اثر پڑتا ہے ،محاصل نہ بڑھے تو تجارتی خسارے اور قرضوں کی ادائیگی میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔
پرانے قرضے اتارنے کیلئے نئے قرضے لینا پڑتے ہیں، مہنگی بجلی سے زراعت پر بھی منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں اور عوام کو اشیائے خورو نوش کی مہنگی قیمت برداشت کرنا پڑتی ہے ،ڈاکٹر مغل نے کہا کہ جس ملک کی توانائی کا64 فیصد حصہ تھرمل پاور، 27 فیصد ہائیڈرو پاور اور7 فیصد جوہری توانائی پر مشتمل ہو وہاں مصنوعات سستی ہو سکتی ہیں نہ برآمدات بڑھ سکتی ہیں اور نہ کرنسی مستحکم ہو سکتی ہے ،دنیا کی دس بڑی کمپنیوں کو دیکھا جائے تو ان میں سے کوئی بھی ٹیکسٹائل کی نہیں بلکہ اکثریت ٹیکنالوجی کی کمپنیاں ہیں مگر اس میدان میں بھی پاکستان بہت پیچھے ہے کیونکہ سرکاری سطح پر ریسرچ ایند ڈیولپمنٹ کو توجہ نہیں دی جاتی۔

پاکستان

چورن اب نہیں بکے گا

شائع شدہ

کو

چورن اب نہیں بکے گا

ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ تحریک انصاف کے کارکن ابھی سے عمران خان کو مسترد کرچکے ہیں اور اب عمران خان کا چورن اب نہیں بکے گا۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف نے 5 سال کیا کام کیا، آج عمران خان کے ساتھ وہی ہورہا ہےجوانہوں نے اپنے کارکنوں کوسکھایا، کارکن لاٹھیاں اٹھا کراپنے لیڈر کو ڈھونڈ رہے ہیں، تحریک انصاف کے کارکن ابھی سے عمران خان کو مسترد کرچکے ہیں، اب عمران خان کا چورن نہیں بکے گا، ٹکٹوں کی غلط تقسیم کرنے والے منہ چھپارہے ہیں اورعمران خان نے 5 سال اس کونکال دو، اس کو ہٹادوکے علاوہ کیا کام کیا، (ن) لیگ کا الیکش میں جھوٹوں کے ساتھ مقابلہ ہے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) اپنےمنشورکا اعلان کرے گی، نیب میں طلبی صرف (ن) لیگ کے رہنماؤں کی ہورہی ہے، جس کے آگے بھی شریف لگے، نیب اسے طلب کررہی ہے، اگرکرپشن کا کوئی ثبوت ہے توسامنے لائیں، عوام کی خدمت کرنے والوں کے خلاف سازش کی جارہی ہے، 3 دفعہ منتخب وزیراعظم نے100 سے زائد پیشیاں بھگتیں ہیں جب کہ کسی کی بیماریوں کوسیاسی رنگ دیناٹھیک نہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے

شائع شدہ

کو

کل حلف اٹھائیں گے

نگراں وزیراعظم جسٹس (ر) ناصرالملک کا کہنا ہے کہ صاف ، شفاف اور غیر جانبدارانہ انتخابات کے لیے الیکشن کمیشن کے ساتھ تعاون میں کوئی کسرنہیں چھوڑی جائے گی۔

نگراں وزیراعظم جسٹس (ر) ناصرالملک کی زیرصدارت الیکشن کمیشن میں اہم اجلاس ہوا، اجلاس میں نگران وزیراعظم کوعام انتخابات کی تیاریوں کے حوالے سے تفصیلات سے آگاہ کیا گیا۔اس موقع پر سیکرٹری الیکشن کمیشن نے وزیر اعظم کو انتخابات کی تیاریوں پر بریفنگ دی۔ اس موقع پر نگراں وزیر اعظم اور چیف الیکشن کمشنر نے اس بات پر اتفاق کیا کہ عام انتخابات میں سیکیورٹی پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔نگراں وزیراعظم جسٹس (ر) ناصرالملک نے الیکشن کمیشن کو ہرممکن تعاون کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ الیکشن کمیشن کے ساتھ تعاون میں کوئی کسرنہیں چھوڑی جائے گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

لاہور باپ کی جاگیر نہیں

شائع شدہ

کو

لاہور باپ کی جاگیر نہیں

مسلم لیگ ن کے رہنما زعیم قادری کا کہنا ہے کہ حمزہ شہباز کے جوتے پالش نہیں کر سکتا۔

مسلم لیگ ن کے رہنما زعیم قادری کا اپنی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھا کہ چھوٹے کارکن کی حیثیت سے عملی سیاست کا آغاز کیا، میرے خون میں مسلم لیگ تھی ہے اور رہے گی، میرے والد نے ایوب خان اور یحیٰ خان کے دور میں جیلیں کاٹیں۔ انہوں نے کہا کہ مجھے فخر ہے 5 سال پابند سلاسل رہا، 8 سال نواز شریف کا ترجمان رہا اور مسلم لیگ ن پنجاب کا سیکریٹری جنرل بھی رہا۔ان کا کہنا تھا 2002 میں نواز شریف اور کلثوم نواز کا کورنگ امیدوار تھا، میری جگہ کچھ اور لوگوں کو آگے کر دیا گیا لیکن ایک لفظ نہیں کہا، اس بار بھی میری جگہ کسی اور امیدوار کو آگے کر دیا گیا۔

زعیم قادری نے قومی اسمبلی کے حلقے این اے 133 سے آزاد حیثیت میں الیکشن لڑنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ حمزہ شہباز کے بوٹ پالش نہیں کر سکتا، نوکری صرف اپنے کارکنوں کی کروں گا۔انہوں نے حمزہ شہباز کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ’سن لو لاہور تمہاری یا تمہارے باپ کی جاگیر نہیں ہے، تمہیں سیاست کر کے دکھاؤں گا‘۔

زعیم قادری کا حمزہ شہباز کو کہنا تھا کہ تم اپنے بوٹ پالیشیوں کو لاؤ اور الیکشن لڑو، میرا مقابلہ تمہارے ساتھ ہے، میں پنجاب اور پاکستان کے ورکرز کے ساتھ کھڑا ہوں گا۔ان کا کہنا تھا کہ اپنی عزت پر کوئی سمجھوتہ نہیں کروں گا، بڑھکیں نہیں مارتا آج سے الیکشن اور جنگ دونوں اکٹھی ہوں گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

مقبول خبریں