Connect with us

پاکستان

فوج کیخلاف ڈٹ گئے

شائع شدہ

کو

شوکاز نوٹس جاری

اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے کہا ہے کہ فوج کیخلاف میرا یہ موقف درست ہے کہ فوج بھی دیگر اداروں کی طرح آئین کی تابع ہے۔

جسٹس شوکت عزیز صدیقی کا کہنا تھا کہ میں اپنے اس بیان سے پیچھے نہیں ہٹوں گا۔ انہوں نے کہا کہ میرے خلاف پراکسی وار لڑی جارہی ہے۔ سپریم جوڈیشل کونسل کو دیئے گئے جواب میں اپنے اس موقف کو واضح کردیا کہ فوج کو بھی آئین کے تابع رہ کر کام کرنا ہوگا بصورت دیگر ملک میں انتشار پیدا ہوگا اور سیاسی عدم استحکام میں بھی اضافہ ہوتا چلا جائے گا۔

پاکستان

کام شروع

شائع شدہ

کو

کام شروع

ملک بھرمیں اپیلٹ ٹربیونلزنے کام شروع کردیا جس کے بعد 22 جون تک ریٹرننگ افسران کے فیصلوں پراپیلیں دائر ہوں گی۔
الیکشن کمیشن کے مطابق ملک بھرکے 849 حلقوں کیلئے 21 اپیلٹ ٹربیوبلز بنائے گئے ہیں،اپیلٹ ٹربیونلزنے کام شروع کردیا جس کے بعد 22 جون تک ریٹرننگ افسران کے فیصلوں پراپیلیں دائرہوں گی۔ اپیلٹ ٹربیونلز23 سے 27 جون تک اپیلوں کونمٹائیں گے۔ دوسری جانب الیکشن کمیشن نے ریٹرننگ افسران سے 21 ہزار امیدواروں کی تفصیلات مانگ لیں جس کے بعد امیدواروں کے حلف نامے اوراثاثوں کی تفصیلات ویب سائیٹ پر شائع کی جائیں گی۔ ریٹرننگ افسران نے امیدواروں کا ڈیٹا اسکین کرکے الیکشن کمیشن سیکریٹریٹ بھجوانا شروع کر دیا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

حکم برقرار

شائع شدہ

کو

حکم برقرار

ہائی کورٹ نے گرمی کی چھٹیوں کی سکول فیس وصول نہ کرنے کا حکم برقرار رکھا ہے۔
اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے نجی اسکولز کے خلاف گرمی کی چھٹیوں میں فیس وصولی سے متعلق درخواست کی سماعت کی۔ ہائیکورٹ نے فیصلہ دیا کہ گرمی کی چھٹیوں میں اسکول فیس وصول نہ کرنے کا حکم برقرار ہے۔ جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے ریمارکس دیے کہ تعلیم کی سوداگری ظلم و استحصال ہے، جو کل ہنڈا 70 موٹرسائیکل پر تھے آج پانچ پانچ لینڈ کروزرز پر پھرتے ہیں، جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے قرار دیا کہ پرائیویٹ اسکولز کا فیس وصول کرنا توہین عدالت ہے، جن اسکولوں نے حکم عدولی کی ان کو توہین عدالت کے نوٹس بھیجیں گے، کچھ اسکول ٹیچرز نے تنخواہوں کی عدم ادائیگی کی درخواست دی اس کو دیکھیں گے۔ عدالت نے کیس کی سماعت 11 جولائی تک ملتوی کر دی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بینچ تشکیل

شائع شدہ

کو

بینچ تشکیل

سانحہ 12 مئی کی ازسرنو تحقیقات کیلئے سندھ ہائیکورٹ کا دو رکنی بینچ تشکیل دے دیا گیا۔
سپریم کورٹ کے حکم پر سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس احمد علی شیخ نے 12 مئی کیس کی سماعت کے لئے جسٹس اقبال کلہوڑو اور جسٹس کے کے آغا پر مشتمل خصوصی دو رکنی بینچ تشکیل دے دیا۔ ہائیکورٹ میں سانحہ 12 مئی کیس کی سماعت ہوئی تو عدالتی معاونین کی عدم حاضری پر عدالت نے برہمی کا اظہار کیا۔ پولیس نے تفصیلات پیش کرتے ہوئے بتایا کہ کراچی کے مختلف تھانوں میں 12 مئی کیس کی 54 ایف آئی آر درج ہوئیں ۔ عدالت نے پولیس رپورٹ کو مسترد کرتے ہوئے 22 جون کو سی سی پی او کراچی اور اے آئی جی لیگل سے تفصیلات طلب کر لیں۔ بینچ نے کہا کہ بتایا جائے کہ ٹرائل کورٹس میں 12 مئی کو مقدمات کی کیا پوزیشن ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

مقبول خبریں