Connect with us

کھیل

پاکستان پر مہربان

شائع شدہ

کو

پاکستان پر مہربان

فٹ بال کی عالمی تنظیم فیفا نے پاکستان کی معطلی ختم کردی جس کے بعد پاکستان ہر سطح کے انٹرنیشنل مقابلوں میں شرکت کا اہل ہو گیا ہے۔

معطلی ختم ہونے کے بعد پاکستان کی کلب ٹیمیں بھی انٹرنیشنل مقابلوں میں حصہ لے سکیں گی۔ فیفا نے پاکستان کی رُکنیت گزشتہ برس 10 اکتوبر کو حکومتی مداخلت کے باعث معطل کی تھی۔رواں سال مارچ میں پاکستان فٹبال فیڈریشن کے منتخب صدر فیصل صالح حیات اور اُن کے اراکین کو پاکستان فٹ بال فیڈریشن کا چارج مل گیا جس کے بعد اُنہوں نے فیفا کو خط لکھ کر آگاہ کیا تھا۔پی ایف ایف میں جمہوری عمل بحال ہونے کے بعد فیفا نے بھی پاکستان کی رُکنیت بحال کرنے کے احکامات جاری کردیے ہیں اور بطور فیفا ممبر پاکستان کے تمام حقوق بحال کردیے گئے ہیں۔معطلی ختم ہونے کے بعد پاکستان فٹ بال فیڈریشن کے نمائندے اور کلب ٹیمیں کسی بھی انٹرنیشنل ایونٹ میں شرکت کے اہل ہوں گے۔

کھیل

پاکستانی شائقین کیلئے خوشخبری

شائع شدہ

کو

پاکستانی شائقین کیلئے خوشخبری

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے 4 سالہ فیوچر ٹور پروگرام جاری کردیا جس کے مطابق پاکستان آسٹریلیا، نیوزی لینڈ، انگلینڈ اور سری لنکا سمیت دیگر ٹیموں کی میزبانی کرے گا تاہم اس میں بھارتی ٹیم شامل نہیں۔
آئی سی سی کے فیوچر ٹور پروگرام کے مطابق پاکستان اکتوبر 2019 میں سری لنکا کی میزبانی کرے گا جس کے دوران 2 ٹیسٹ میچز کھیلے جائیں گے اور اسی سال نومبر میں قومی ٹیم آسٹریلیا کا دورہ کرے گی، دونوں ٹیموں کے درمیان 3 ٹی ٹوئنٹی اور 3 ٹیسٹ میچز پر مشتمل سیریز کھیلی جائے گی۔ 2020 گرین شرٹس کے لیے مصروف ترین سال ہوگا جس کے دوران پاکستان کئی ٹیموں کی نہ صرف میزبانی کرے گا بلکہ قومی ٹیم کے دیگر ممالک دورے بھی شیڈول ہیں۔ جنوری 2020 میں پاکستان 3 ون ڈے اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کے لیے سری لنکا کی میزبانی کرے گا جس کے بعد فروری 2020 میں پاکستان 2 ٹیسٹ اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کے لیے بنگلادیش کی میزبانی کرے گا۔ جون 2020 میں انگلینڈ 3 ٹیسٹ اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کے لیے پاکستان کی میزبانی کرے گا جب کہ قومی ٹیم اسی ماہ آئرلینڈ کے خلاف بھی 2 ٹی ٹوئنٹی میچز کھیلے گی۔
اکتوبر 2020 میں پاکستان ٹیم 3 ٹی ٹوئنٹی اور 3 ون ڈے میچز کے لیے جنوبی افریقا کا دورے گی جب کہ نومبر 2020 میں پاکستان زمبابوے کی میزبانی کرے گا جس کے دوران 3 ٹی ٹوئنٹی اور 3 ایک روزہ میچز کی سیریز کھیلی جائے گی۔ دسمبر 2020 میں پاکستان ٹیم نیوزی لینڈ کا دورہ کرے گی جس کے دوران 2 ٹیسٹ اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز پر مشتمل سیریز کھیلی جائے گی۔ 2021 بھی قومی کرکٹ ٹیم کے لیے مصروف ترین سال ثابت ہوگا جس کے دوران پاکستان جنوبی افریقا، ویسٹ انڈیز اور نیوزی لینڈ کی میزبانی کرے گا اور اس سال قومی ٹیم افغانستان، ویسٹ انڈیز، انگلینڈ اور زمبابوے کی مہمان بھی بنے گی۔ پاکستان فروری 2021 میں 2 ٹیسٹ اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کے لیے جنوبی افریقا کی میزبانی کرے گا اور اپریل میں قومی ٹیم زمبابوے کا دورہ کرے گی جس کے دوران 2 ٹیسٹ اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز پر مشتمل سیریز کھیلی جائے گی۔
جولائی 2021 میں پاکستان ٹیم 3 ون ڈے اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کھیلنے انگلینڈ جائے گی اور اگست میں ویسٹ انڈیز کے دورے کے دوران قومی ٹیم 3 ٹی ٹوئنٹی اور 3 ٹیسٹ میچز پر مشتمل سیریز کھیلے گی۔ ستمبر 2021 میں پاکستان ٹیم 3 ون ڈے میچز کے لیے افغانستان کی مہمان بنے گی اور دسمبر میں قومی ٹیم ویسٹ انڈیز کے دورے کے دوران 3 ون ڈے اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کھیلے گی۔ اکتوبر 2021 میں پاکستان ٹیم نیوزی لینڈ کی میزبانی کرے گی جس کے دوران 3 ون ڈے اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز پر مشتمل سیریز کھیلی جائے گی اور دسمبر 2021 میں پاکستان ویسٹ انڈیز کی میزبانی کرے گا اور دونوں ٹیموں کے درمیان 3 ون ڈے اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کھیلے جائیں گے۔ 2022 میں پاکستان اپنے سفر کا آغاز فروری میں آسٹریلیا کی میزبانی سے کرے گا جس کے دوران دونوں ٹیموں کے درمیان 3 ون ڈے، 3 ٹی ٹوئنٹی اور 2 ٹیسٹ میچز پر مشتمل سیریز ہوگی جس کے بعد اگست میں پاکستان ٹیم 3 ون ڈے اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کھیلنے سری لنکا جائے گی۔ نومبر 2022 میں پاکستان 5 ون ڈے اور 3 ٹیسٹ میچز کے لیے انگلینڈ کی میزبانی کرے گا اور نومبر میں ہی نیوزی لینڈ اور پاکستان کے درمیان 2 ٹیسٹ اور 3 ایک روزہ میچز کی سیریز کا آغاز ہوگا جس کی میزبانی بھی پاکستان کے حصے میں آئی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

کھیل

فہرست تیا ر

شائع شدہ

کو

فہرست تیا ر

دوہ زمبابوے سے قبل سینٹرل کنٹریکٹ کی فہرست رواں ہفتے کے آخر میں مرتب کیے جانے کا امکان ہے چیف سلیکٹر انضمام الحق، ہیڈ کوچ مکی آرتھر اور بورڈ حکام کے ساتھ مشاورت کرینگےٹور کیلیے اسکواڈ کو حتمی شکل دینے سے قبل انجرڈ کھلاڑیوں کی موجودہ صورتحال کا جائزہ بھی لیا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق پی سی بی کی جانب سے کرکٹرز کو دیے جانے والے سینٹرل کنٹریکٹ 30جون کو ختم ہوجائیں گے، یکم جولائی سے شروع ہونے والے نئے معاہدوں کیلیے حتمی فہرست تاحال مرتب نہیں کی گئی،ذرائع کا کہنا ہے کہ اس بار کھلاڑیوں کی تعداد کم لیکن معاوضے زیادہ رکھنے کی تجویز زیر غور ہے، رواں ہفتے کے آخر میں چیف سلیکٹر انضمام الحق، ہیڈ کوچ مکی آرتھر اور بورڈ حکام کے ساتھ مشاورت کے بعد فیصلہ کرینگے۔دوسری جانب تنخواہوں کی عدم ادائیگی پر بائیکاٹ کی دھمکی دینے والے زمبابوین کرکٹرز کے تنازع کی وجہ سے ابھی تک سہ ملکی سیریز کے بارے میں حتمی طور پر کچھ نہیں کہا جا سکتا البتہ پاکستانی کرکٹرز مختصر تربیتی کیمپ کیلیے لاہور میں اکٹھے ہورہے ہیں

پڑھنا جاری رکھیں

کھیل

حُسن کے دیوانے

شائع شدہ

کو

حُسن کے دیوانے

فیفا ورلڈ کپ کے لیے روس پہنچنے والے غیرملکی شائقین مقامی لڑکیوں کی محبت میں گرفتار ہونے لگے۔فیفا ورلڈ کپ کے لیے روس پہنچنے والے غیرملکی شائقین مقامی لڑکیوں کی محبت میں گرفتار ہونے لگے، خاص طور پر ماسکو کی گلیوں میں غیرملکی افراد کو روسی لڑکیوں کے ساتھ دیکھا جا سکتا ہے۔ارجنٹائن کے ایک شائق آگسٹن اوٹیلو کا کہنا ہے کہ میں نے اب تک چار لڑکیوں کے موبائل نمبر حاصل کیے ہیں، میرا اپنے دوستوں کے ساتھ مقابلہ ہے کہ ہم یہاں پر کتنی لڑکیوں کے نمبرزحاصل کرپاتے ہیں۔ یاد رہے کہ ٹورنامنٹ کے آغاز پر ایک مقامی کمیونسٹ لیڈر نے روسی خواتین کو خبردار کیا تھا کہ وہ غیرملکیوں سے دور رہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

مقبول خبریں