Connect with us

پاکستان

پاک،افغان رضامند

شائع شدہ

کو

پاک،افغان رضامند

پاکستان اور افغانستان کے درمیان امن و یکجہتی کے لیے اقدامات پر اتفاق کیا گیا ہے اور امن و استحکام کے لیے پاک افغان پلان آف ایکشن کو بھی حتمی شکل دے دی ہے۔ پاکستان اور افغانستان کے سفارتی وفود کی ملاقات اسلام آباد میں ہوئی جس میں پاکستانی وفد کی قیادت سیکریٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے کی جب کہ افغان وفد کی قیادت نائب وزیر خارجہ حکمت خلیل کرزئی نے کی۔ ملاقات میں دو طرفہ امور اور علاقائی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ دونوں وفود کی ملاقات کے بعد مشترکہ اعلامیہ بھی جاری کیا گیا جس میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی سے افغان صدر کی گزشتہ ماہ ملاقات کے نتیجے میں مذاکرات ہوئے ہیں۔ اعلامیے میں کے مطابق پاکستان اور افغانستان میں امن ویکجہتی کے لیے اقدامات پر اتفاق کیا گیا اور پاک افغان ایکشن پلان کو حتمی شکل دے دی گئی ہے۔ اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ پلان آف ایکشن دو طرفہ مسائل کے حل کا ایک مکینزم ہے جس کے تحت پاکستان اور افغانستان میں اعتماد بڑھے گا۔ اعلامیے کے مطابق مشترکہ مقاصد کے حصول اور دہشت گردی کے خاتمے کے لیے بھی پلان آف ایکشن پر عمل درآمد پر اتفاق کیا گیا ہے۔ یاد رہے کہ وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے 6 اپریل کو افغانستان کا دورہ کیا تھا جس میں باہمی تعلقات، دہشت گردی کے خلاف جنگ اور علاقائی روابط بڑھانے پر تبادلہ خیال ہوا تھا۔ ملاقات میں افغان امن مذاکرات، افغان مہاجرین کی واپسی، ریل روڈ منصوبوں اور دونوں ممالک کے درمیان قیدیوں کے تبادلے پر بھی تبادلہ خیال ہوا تھا۔

پاکستان

الیکشن سے مایوس

شائع شدہ

کو

الیکشن سے مایوس

چیرمین پی ٹی آئی عمران خان کا کہنا ہے کہ میں الیکشن کولیکربہت مایاس ہوں کیونکہ انتخابات کے حوالےسے اچھی خبریں موصول نہیں ہورہی جب کہ الیکشن میں عوام کو اپنا بھرپور کردار ادا کرنا ہو گا۔ رپورٹ کے مطابق عمران خان نتھیا گلی ،جہلم اورلاہور میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے سیاسی مخالفین پرخوب گرجےبرسے، ان کا کہنا تھا کہ (ن) لیگ نے ملک کوقرضوں میں ڈبودیا ہے لہذا اس جماعت کو ہر گز ووٹ نہ دیں۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ انتخابات کے حوالےسے اچھی خبریں موصول نہیں ہورہی الیکشن میں عوام کو اپنا بھرپور کردار ادا کرنا ہو گا جب کہ کرپٹ حکمران کبھی کرپشن ختم نہیں کرسکتے، لیکن ہم اقتدارمیں آکرعوام کاپیسہ عوام پرہی خرچ کریں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بلے اوربلی کے خلاف

شائع شدہ

کو

تو تڑاک پر اتر آئے

ٹیکسلا میں پہلے ٹمبر مارکیٹ اور بعد میں نواب آباد میں انتخابی جلسوں سے خطاب کرتے ہوئے چوہدری نثار علی خان نے اپنے مخالفین کو نشانے پر لئے رکھا، ان کا کہنا تھا کہ میرے مخالفین حواس باختہ ہو چکے ہیں اور ڈر کی وجہ سے حلقہ میں عمران خان کو بلوا لیا ہے جب کہ میں اس حلقے کا منتخب نمائندہ نہیں تھا مگر ٹیکسلا کو تحصیل کا درجہ میں نے دلوایا، سوئی گیس دلوائی ، سڑکیں بنوائیں اور وفاداری کرتے ہوئے یہاں خدمت کی۔
چوہدری نثار نے اپنے جلسے میں لیٹ آنے والوں کو پیغام دیتے ہوئے کہا کہ جلسے میں لیٹ آنے والوں کواہم پیغام دیتا ہوں کہ الیکشن والے دن بھی اسی طرح لیٹ آئے تو کوئی آپکا انتظار نہیں کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن نعروں اور تقریروں سے نہیں ، خدمت کی بنیاد پر لڑا جاتا ہے جب کہ شیر کے نشان والوں کی 25 جولائی کو ضمانتیں ضبط ہوں گی، یہ شیر نہیں دراصل بلی ہے، بَلے اور بلی کے خلاف جیپ کو ووٹ دینا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

نوازشریف کودفاع کاحق

شائع شدہ

کو

نئی مردم شماری چیلنج

پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ مصطفیٰ کمال نے کہا ہے کہ ووٹرز کو سوچنا ہوگا کہ انہیں لاشوں والا یا روشنی والا پرامن کراچی چاہیے۔ مصطفیٰ کمال نے وفد کے ہمراہ مرکزی رویت ہلاک کمیٹی کے چیئرمین مفتی منیب الرحمٰن سے ملاقات کی ،باہر آکر میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ سندھ کے عوام کے پاس پی ایس پی کے سوا کوئی آپشن نہیں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ اندرون سندھ 2 روزہ انتخابی دورے کا آغاز مفتی منیب الرحمٰن سے دعائیں لے کر کررہے ہیں ۔ حیدرآباد پہنچنے کے بعد مصطفیٰ کمال نے دعویٰ کیا کہ کراچی کو 6 ماہ میں دوبارہ روشنیوں کا شہر بنادیں گے اور حیدر آباد 3 ماہ بعد صاف ستھرا چمکتا ہوا شہر ہوگا ۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہم وہ نہیں جو ووٹ لینے کے بعد بولیں ہمارے پاس اختیار نہیں، لوگوں کو امید ہےکہ ظلم کی سیاہ رات ختم ہونےوالی ہے۔ پی ایس پی سربراہ نے مزید کہا کہ دنیا چاند پرجا رہی ہے اور سندھ کےلوگ پانی کی بوند بوند کو ترس رہےہیں، یہاں تعلیم ہے نہ صحت کی سہولیات ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ سندھ کےعوام کو طویل عرصہ کےبعد ہوا کا تازہ جھونکا پی ایس پی کی شکل میں ملا ہے،پی ایس پی کے امیدواروں کا کسی سےنہیں ،اپنے امیدواروں سےہی مقابلہ ہے۔ مصطفیٰ کمال نے یہ بھی کہا کہ نواز شریف پر جو الزامات ہیں انہیں اس کا دفاع کرنے کا پورا حق ملنا چاہیے،انصاف ہوتا ہوا نظر آنا چاہیے۔

پڑھنا جاری رکھیں

مقبول خبریں