خاتون نے جوتے مستحق بچوں میں تقسیم کردیئے

امریکا کی ایک ہمدرد خاتون نے سیل پر رکھے سارے جوتے خرید کر بے گھر اور مستحق بچوں کو عطیہ کردیئے

 امریکا کی ایک ہمدرد خاتون نے سیل پر رکھے سارے جوتے خرید کر بے گھر اور مستحق بچوں کو عطیہ کردیئے۔ تین بچوں کی ماں کیری جرنیگن کا تعلق آرکنساس سے ہے اور انہوں نے اخباری نمائندوں کو بتایا کہ انہوں نے امریکا کے مشہور پے لیس اسٹور سے  1500 جوڑے خریدے ہیں لیکن اس کی مالیت نہیں بتائی۔ تاہم رسیدوں سے گمان ہے کہ انہوں نے سارے جوتے 21 ہزار ڈالر میں خریدے ہیں جن کی مالیت 33 لاکھ 40 ہزار روپے بنتی ہے۔

carry jeringen

کیری نے یہ سارے جوتے ایسے بچوں کو دیئے ہیں جو اسکول جانے والے تھے یا نئی جماعت میں پہنچ گئے اور ان کے پاس رقم نہیں تھی۔ اس طرح یہ جوتے نئے تعلیمی سال کے لیے بچوں کی خوشی میں اضافے کی وجہ بنے۔ ’ میرے علاقے میں غربت کی شرح زیادہ ہے اور میں اسکولوں کے بورڈ کی سربراہ ہوں جہاں بچوں کے پاس نئے جوتے نہیں ہوتے۔ اسی بنا پر میں نے ان بچوں کے لیے جوتے خریدے جو نئے تعلیمی سال پر بھی جوتوں سے محروم ہیں،‘ کیری نے بتایا۔

shoe store

وہ اپنے بچوں کے ساتھ جوتے لینے پے لیس پہنچیں تو ان کی بیٹی نے اپنی ایک ساتھی کے لیے جوتے خریدنے کی خواہش کی۔ اس پر کیری نے پے لیس اسٹور کے کلرک سے پوچھا کہ اگر وہ سیل میں رکھے بچوں کے تمام جوتے خریدے تو اس کا خرچ کتنا ہوگا؟

پہلے تو کلرک سمجھا کہ خاتون مذاق کررہی ہیں لیکن باربار اصرار پر مینیجر کو بلایا گیا۔ اس کے بعد تمام معاملات طے ہوئے اور 12 گھنٹے کی محنت سے 95 بڑے کارٹن میں 1500 جوڑے رکھے گئے اور انہیں ایک بڑے ٹرک پر لاد کر گھر پہنچایا گیا۔

You might also like

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept