فضل الرحمن دھرنا ملک کے لئے انتہائی خطرناک، کھوج رپورٹ

ملک واقعی خطرناک دور میں داخل ہو چکا ہے‘ ہماری سیاسی حماقتیں ملک کو چلنے کے قابل نہیں چھوڑیں گی

جمعیت علماء اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کا حکومت مخالف آزادی مارچ اور دھرنے کے حوالہ سے انتہائی خطرناک رپورٹ منظر عام پر آئی ہے۔

کھوج رپورٹ کے مطابق ملک واقعی خطرناک دور میں داخل ہو چکا ہے‘ ہماری سیاسی حماقتیں ملک کو چلنے کے قابل نہیں چھوڑیں گی‘ میں نے 2014میں عمران خان سے کہا تھا آپ دھرنے کی غلطی بھی نہ کریں اور اپنی خواہشوں کا تابوت علامہ طاہر القادری کے مدرسے کے بچوں کے کندھوں پر بھی نہ رکھیں‘ تاریخ آپ کو کبھی معاف نہیں کرے گی‘ عمران خان نے پوچھا تھا‘ کیوں؟ میں نے عرض کیا تھا‘ ہم نے اگر دھرنے سے ایک حکومت گرا دی تو پھر یہ روایت پڑ جائے گی۔

ملک میں اگلا دھرنا مولانا فضل الرحمن دیں گے اور پورا ملک مل کر بھی ان کا مقابلہ نہیں کر سکے گا‘ عمران خان نے میری بات نہیں مانی چناں چہ یہ آج مولانا فضل الرحمن کا نشانہ بننے کے لیے تیار بیٹھے ہیں‘ میں آج بھی یہ سمجھتا ہوں اگر مولانا یہ حکومت گرانے میں کام یاب ہو گئے تو پھر اس ملک کو کوئی مستحکم حکومت نصیب نہیں ہو سکے گی‘ ہم سب جتھوں کا لقمہ بن جائیں گے لہٰذا کچھ بھی کرنا پڑے آپ مولانا کو روکیں‘آپ سسٹم کو بچائیں‘ مولانا نہ رکے تو پھر کچھ بھی نہیں بچے گا‘ حکومت اور اپوزیشن مل کر مارشل لاء کا مطالبہ کریں گی۔

شاید آپ یہ خبریں بھی پسند کریں

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept