ٹک ٹوک ویڈیو بنانے کے دوران گولی چلنے سے نوجوان ہلاک

بھارت میں سماجی رابطے کی ایپ ٹک ٹوک پر ویڈیو بنانے کے دوران غلطی سے گولی چل جانے پر 19 سالہ نوجوان سلمان ہلاک ہوگیا۔ بھارتی دارالحکومت کے علاقے جعفر آباد کا رہائشی نوجوان سلمان اپنے دو دوستوں سہیل اور عامر کے ہمراہ انڈیا گیٹ سیر و تفریح کے لیے گیا تھا، جہاں سے واپسی پر سہیل نے ٹک ٹوک ویڈیو بنانے کی خواہش کا اظہار کیا اور ڈرائیونگ سیٹ پر بیٹھے سلمان کی جانب پستول کا رخ کر دیا جو غلطی سے چل گئی۔

گولی سلمان کے گردن میں لگی جس کے باعث کافی خون بہہ گیا، سہیل اور عامر نے سلمان کو اسپتال لے جانے کے بجائے پہلے اپنے ایک رشتہ دار کے گھر لے گئے جہاں سہیل نے اپنے خون کے دھبے لگے کپڑے تبدیل کیے اور پھر سلمان کو لے کر قریبی اسپتال پہنچا تاہم اس وقت تک دیر ہوچکی تھی اور ڈاکٹرز نے سلمان کی موت کی تصدیق کردی۔پولیس کا کہنا ہے کہ سہیل ملک اور عامر کو قتل اور شواہد مٹانے کے جرم میں گرفتار کرلیا ہے اگر دونوں دوست سلمان کو بروقت اسپتال لے جاتے تو شاید اس کی جان بچ سکتی تھی، ملزمان کے دعوے اور کیس کے ہر پہلو پر تحقیقات کی جائے گی۔