Connect with us

انٹرنیشنل

صوبہ پکتیکا پرقبضہ

Published

on

صوبہ پکتیکا پرقبضہ

بین الاقوامی ذرائع ابلاغ کے مطابق افغان حکام کے مطابق پاکستانی سرحد سے منسلک افغان صوبے پکتیکا کے 2 اضلاع پر طالبان عسکریت پسند کنٹرول حاصل کرنے میں کامیاب ہو گئے ہیں۔ عسکریت پسندوں نے اومنا اور گایان اضلاع پر کنٹرول حاصل کرنے کیلیے گزشتہ اتوار سے ان شہروں میں چیک پوسٹوں پر مسلسل حملے شروع کر رکھے تھے، ان چیک پوسٹوں سے افغان سیکیورٹی اہلکاروں کو پسپائی اختیار کرنا پڑ گئی، طالبان جنگجوؤں نے خالی کردہ چیک پوسٹوں سے اسلحے کی بھاری تعداد پر بھی قبضہ کر لیا۔ صوبائی کونسل کے رکن فضل رحمن کاتاوازی کے مطابق ان اضلاع پر طالبان کو کنٹرول 2 دن تک مسلسل لڑائی کے بعد حاصل ہوا۔ افغانستان کے چیف ایگزیکٹو ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ نے امریکی ٹی وی کو انٹرویو میں کہا ہے کہ 4 فریقی امریکا، افغان، سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات بات چیت کا مقصد افغان امن عمل میں مدد دینا ہے۔ ہمیں امید ہے کہ مشرق وسطیٰ کی کشیدگی اور دیگر نوعیت کا عالمی تناؤ افغان صورتحال پر کسی طور منفی اثر نہیں ڈالے گا، افغانستان اپنے تمام اتحادیوں سے یہ امید رکھتا ہے کہ وہ اس ہمسایہ ملک پر زور دیں گے جو طالبان کا حامی ہے تاہم انھوں نے کہا کہ ’’ابھی تک امن کے حصول کے معاملے میں پیش رفت سامنے نہیں آئی‘‘۔
ساتھ ہی ان کا کہنا تھا کہ امن کوششیں جاری رکھی جانی چاہئیں، طالبان کے ساتھ کسی سمجھوتے پر پہنچنے کے بارے میں ایک سوال پر انھوں نے کہا کہ جنوبی ایشیا سے متعلق نئی امریکی پالیسی میں طالبان اور دہشت گرد گروپوں کے ایک ہمسایہ ملک میں موجود محفوظ ٹھکانوں کو ہدف بنایا جانا شامل ہے، انھوں نے کہا کہ کسی امن عمل میں امریکا نے ہمیشہ افغان مفادات کا دفاع کیا ہے۔ ایک اور سوال پر انھوں نے کہا کہ کچھ ملکوں کا طالبان پر اثر و رسوخ ہے اور اْن سے رابطہ ہے اور اِس توقع کا اظہار کیا کہ ایسے ملک اس موقع کا فائدہ اٹھاتے ہوئے امن و استحکام کے لیے کام کریں گے، انھوں نے کہا کہ افغانستان میں کشیدگی جاری رہنے کا کسی ملک کو فائدہ نہیں ہوگا۔ رشید دوستم کی وطن واپسی سے متعلق ایک سوال پر ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ نے کہا کہ وہ نائب صدر کے طور پر اپنے فرائض انجام دیتے رہیں گے، جبکہ وفد کے ترکی آنے جانے کے معاملے کے آئینی مضمرات زیر غور ہیں، یہ معلوم کرنے پر کہ پاکستان کے انتخابات سے ان کی کیا توقعات وابستہ ہیں۔ ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ نے کہا کہ افغانستان انتخابی نتائج پر نگاہ رکھے ہوئے ہے لیکن انتخابات کا اثر تبھی پڑے گا کہ سویلین اور سیکیورٹی اسٹیبلشمنٹ دونوں مل کر یہ فیصلہ کریں کہ افغانستان میں عدم استحکام کی اجازت نہیں دی جائے گی یا پھر طالبان کو امن مذاکرات کا پابند کریں گے۔

انٹرنیشنل

21 مسافر اغوا

Published

on

21 مسافر اغوا

افغانستان میں طالبان نے تین مسافر بسوں کو یرغمال بنا کر 21 افراد کو اغوا کرلیا۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق طالبان نے قندوز کے علاقے میں گزشتہ شب تین مسافر بسوں کو یرغمال بنالیا جس میں مجموعی طور پر 170 افراد سوار تھے جن میں سے 149 مسافروں کو جانے دیا جب کہ 21 افراد کو سیکیورٹی اہلکار ہونے کے شبے میں طالبان اپنے ہمراہ لے گئے۔افغان وزارت داخلہ کے ترجمان نصرت رحیمی نے میڈیا کو بتایا کہ 21 افراد کو طالبان کے قبضے سے رہا کرانے کے لیے سیکیورٹی فورسز نے آپریشن کا آغاز کردیا ہے جس کے دوران 7 طالبان جنگجوؤں کو ہلاک کردیا گیا ہے۔ آپریشن مغویوں کی بازیابی تک جاری رہے گا۔مسافر بسیں قندوز صوبے کے ہائی وے سے کابل کی جانب جارہی تھیں۔ یہ علاقہ طالبان کے زیر تسلط ہے۔ طالبان کے ترجمان کا کہنا تھا کہ بسوں میں سیکیورٹی اہلکاروں کی موجودگی کی اطلاع پر مسافروں کو یرغمال بنایا تھا۔ جانچ پڑتال کے بعد 149 مسافروں کو جانے دیا۔

Continue Reading

انٹرنیشنل

پابندی عائد

Published

on

جراثیم کا پلندہ

بھارتی ریاست تامل ناڈو کے تمام کالجز میں موبائل فون کے استعمال پر پابندی لگادی گئی جبکہ طالب علموں نے اس اقدام کو رجعت پسندانہ قرار دیا بھارتی میڈیا کے مطابق ڈائریکٹوریٹ آف کالجیٹ ایجوکیشن کے اعلامیہ میں کہا گیا کہ تامل ناڈو کے تمام کالجز میں موبائل فون پر پابندی عائد کردی گئی لہذا اب سٹوڈنٹس کو موبائل فون رکھنے کی اجازت نہیں ہوگی۔چنئی میں ایک نجی کالج کی پرنسپل نے کہا کہ کیمرہ فون کا غلط استعمال کیا جاتا ہے، طلبہ خواتین فیکلٹی ممبرز کی ویڈیو بناکر اسے سوشل میڈیا پر شیئر کردیتے ہیں۔پرنسپل نے کہا کہ ایسے تعلیمی ادارے جہاں لڑکے اور لڑکیاں ساتھ پڑھتے ہیں، طالبات اپنے ساتھی طلبا کے ساتھ ویڈیو بنوالیتی ہیں، جن کا بعد میں غلط استعمال کیا جاتا ہے۔

Continue Reading

انٹرنیشنل

حکومتی پیشکش مسترد

Published

on

حکومتی پیشکش مسترد

طالبان نے افغان حکومت کے طرف سے کی جانے والی جنگ بندی کی مشروط پیشکش مسترد کر دی ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق افغان طالبان نے حکومتی پیشکش مسترد کرتے ہوئے اپنے حملے جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ جنگ بندی سے صرف امریکا کو ہی فائدہ ملے گا جس کی وجہ سے حملے نہیں روکے جائیں گے،گذشتہ روز افغان صدر نے تین ماہ کی مشروط جنگ بندی کا اعلان کیا تھا جس کا پاکستان حکومت کی جانب سے بھی خیرمقدم کیا گیا تھا۔

Continue Reading

مقبول خبریں