سفر کرنے والوں کی تعداد نہ ہونے کے برابر

firendship bus
Avatar WebDesk 2 , مارچ 16, 2019

 بھارت کی طرف سے پاکستانی شہریوں کو ویزوں کے اجرا میں کمی اور سخت شرائط کی وجہ سے دوستی بس کے ذریعے سفر کرنے والوں کی تعداد نہ ہونے کے برابر رہ گئی ہے، جس کی وجہ سے دوستی بس سروس ناکام ہوتی نظرآرہی ہے۔

پلوامہ حملے کے بعد بھارت نے پاکستانی شہریوں کے لئے ویزا پالیسی مزید سخت کردی ہے جس کی وجہ سے بھارت جانے والے پاکستانی شہریوں کو مشکل کا سامنا ہے جب کہ لاہور اور دہلی کے مابین چلنے والی دوستی بس بھی چند ایک مسافر ہی لے کر آتی اور جاتی ہے۔ جمعہ کے روز لاہورسے 8 مسافر بھارت روانہ ہوئے جن میں زیادہ تعداد بھارتی شہریوں کی تھی جبکہ دہلی سے لاہور آنے والے مسافروں کی تعداد 14 بتائی گئی ہے۔

لاہور میں بھارت کے لئے ویزا درخواستیں وصول کرنے والی نجی کورئیر کمپنی میں ایک خاتون بشری ملک نے بتایا کہ ان کے بیٹے کو جگر کا عارضہ ہے ، ڈاکٹروں نے اس کا علاج بھارت میں تجویزکیا ہے، وہ لوگ دو مرتبہ کوشش کرچکے ہیں لیکن ہر بار بھارتی سفارتخانہ کوئی نہ کوئی جواز بنا کر ویزا درخواست مسترد کردیتا ہے ، آج انہوں نے دوبارہ درخواست جمع کروائی ہے ،اللہ کرے اس بار ویزا مل جائے۔

ایک شخص عبدالرحیم کا کہنا تھا اس کے سسرال بھارت میں ہیں، جہاں ان کے ایک عزیز کی شادی ہے، پلوامہ حملوں سے بھی پہلے ان کے خاندان کے 12 افراد نے ویزا کی درخواست دی تھی، لیکن اب تک صرف مجھے اور اہلیہ کو ویزامل سکا ہے باقی تمام لوگوں کی درخواستیں مسترد کردی گئی ہیں۔

کورئیر سروس کے نمائندے نے بھی اپنا نام ظاہرنہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ صرف لاہور سے جو ویزا درخواستیں جمع کروائی جارہی ہیں ان میں سے 70 فیصد ویزا درخواستیں مسترد ہوجاتی ہیں ، چند ایک درخواستیں کسی تکنیکی وجہ سے مسترد ہوتی ہے تاہم زیادہ تر درخواستیں مسترد کئے جانے کی کوئی وجہ بھی نہیں بتائی جاتیں۔ بھارت کی طرف سے پاکستانی زائرین کو بھی ویزا نہیں دیا جارہا ہے ، اس طرح بزنس ویزا بھی نہ ہونے کے برابر ہے، تاہم علاج اورانتہائی قریبی رشتہ داروں کو ویزے جاری ہوتے ہیں۔

مسافروں کی تعداد میں کمی کی وجہ سے پاکستان اور بھارت کے مابین چلنے والی دوستی بس سروس ناکام ہوتی نظر آرہی ہے، پاکستان ٹوورازم ڈویلپمنٹ کارپوریشن کو خسارے کا سامنا ہے تاہم اس کے باوجود دوستی کے نام پر یہ خسارا برداشت کیا جارہا ہے۔ لاہور سے دہلی تک بس کا کرایہ 4 ہزار جب کہ بچوں کے لئے کرایہ 2500 روپے ہے۔ جب کہ بس کا ڈیزل، ڈرائیور اور ہیلپرکی تنخواہوں سمیت دیگرعملے کا اخراجات لاکھوں روپے ہے۔

khouj

Established in 2017, Khouj is a news website, which aims at providing news from all the spheres of life. In the contemporary world, Khouj News aims at providing authentic news unlike other major news sources on social media.