عامرکیانی نے وزارت سے ہٹائے جانے پر خاموشی توڑدی

 سابق وفاقی وزیرعامر کیانی کا کہنا ہے کہ عمران خان کا فیصلہ تسلیم کرتا ہوں مگر ادویات کی قیمتیں بڑھانے میں میرا قصور نہیں تھا۔ 

سابق وفاقی وزیر صحت عامر کیانی نے وزارت سے ہٹائے جانے پر رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ دکھ ہوا کہ مجھ پر نااہلی کا الزام لگ گیا مگر حقائق ایسے نہیں ہیں، ادویات کی قیمتیں کچھ مسلم لیگ (ن) کی کابینہ نے بڑھائی اور کچھ ڈالر کی وجہ سے بڑھیں۔

عامر کیانی کا کہنا تھا کہ 345 ادویات کی قیمتوں میں 2.4 فیصد اضافے کا فیصلہ مسلم لیگ (ن) کے دور میں کیا گیا، مسلم لیگ (ن) کی کابینہ کے منظورکردہ بل کے باعث 100 روپے کی دوائی 240 تک چلی گئی، جو ہم نے قیمت بڑھائی اس سے معمولی اضافہ ہوا، ڈالر کی قیمت کے باعث ہم نے دوسری ادویا ت کی قیمتوں میں 2 سے 9 فیصد اضافہ کیا جب کہ مسلم لیگ (ن) میرے دعوی کو چیلنج کرے حقائق سامنے لے آوں گا۔

سابق وفاقی وزیر نے کہا کہ عمران خان پراعتماد ہے، وہ بندوق دیکر بارڈر پر بھی بھیج دیں تو جانے کو تیار ہوں، عمران خان عوام کا دکھ برداشت نہیں کرسکتے، ادویات قیمتیں بڑھنے پرمضطرب تھے، عمران خان کی نظرعوام پر ہے اور مجھے ان کا فیصلہ تسلیم ہے وہ میرے لیڈر ہیں۔

You might also like

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept