چیف جسٹس کا انصاف نا دینے کا اعتراف

saqib nisar
Avatar WebDesk 2 , جنوری 06, 2019

سپریم کورٹ کے چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا ہے کہ عوام کو نیا پاکستان اور سستا انصاف دینے میں ناکام ہوگئی۔ چیف جسٹس نے گزشتہ روز سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت کی نا اہلی کھل کر سامنے آچکی ہے اور موجودہ حکومت کے تمام دعوے کھوکھلے ثابت ہورہے ہیں۔

: چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار نے پی کے ایل آ ئی کیس میں ریمارکس دیے ہیں کہ پنجاب حکومت کی نااہلی کو تحریری حکم کا حصہ بنا رہے ہیں۔سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں چیف جسٹس پاکستان ثاقب نثار کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے پاکستان کڈنی اینڈ ٹرانسپلانٹ انسٹی ٹیوٹ (پی کے ایل آ ئی) سے متعلق ازخود نوٹس کیس کی سماعت کی۔

سپریم کورٹ نے پنجاب حکومت، محکمہ صحت اور وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد پر سخت اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے 22 ارب لگا دیا، پھر بھی یہ اسپتال پرائیوٹ لوگوں کو چلا گیا، لیکن یہ واپس آنا چاہیے۔چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ پی کے ایل آئی سے متعلق قانون سازی کا کیا بنا؟۔ صوبائی وزیر صحت یاسمین راشد نے جواب دیا کہ قانون سازی کیلئے مسودہ محکمہ قانون کو بھجوا جوا دیا گیا ہے۔
چیف جسٹس نے کہا کہ گزشتہ سماعت پر ب?ی آپ کی جانب سے یہی کہا گیا ت?ا، آپ نہیں چاہتے کہ سپریم کورٹ پنجاب حکومت کی مدد کرے، یہ بتائیں کہ جگر کی پیوندکاری کے آپریشن کا کیا بنا؟۔

khouj

Established in 2017, Khouj is a news website, which aims at providing news from all the spheres of life. In the contemporary world, Khouj News aims at providing authentic news unlike other major news sources on social media.