آئین پرعمل درآمد نہیں ہورہا;فضل الرحمان

جمعیت علماء اسلام(ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ پاکستان کی نظریاتی شناخت کو تبدیل کیا جارہا ہے، بین الاقوامی لابی معاملات پر ہمیں ڈکٹیٹ کرتی ہے۔

پشاور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ مقدس صحیفے ملکی آئین پر عمل درآمد نہیں ہورہا ہے،آئین پر عمل نہ ہونے سے سیاسی طور پر تشنگی محسوس ہورہی ہے، ملک کی مذہبی،سماجی اورجغرافیائی ساکھ کوآئین میں سمویا گیا۔

انہوں نے کہا کہ 18ویں ترمیم کےوقت ہم نے کہا تھا نیب قوانین کو نکالا جائے، ن لیگ، پیپلزپارٹی نےنیب قوانین کو ختم کرنے سے انکار کیا تھا اب بھگتیں، نیب کے ذریعے سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جارہا ہے ۔

فضل الرحمان نے مزید کہا کہ جب یہ اپوزیشن میں تھے تو مودی کے یار کو غدار کہتے تھے، اب وہ ان کا زیادہ دوست ہے۔