حمزہ شہباز کو گرفتار نہ کرنے کا فیصلہ

نیب پاکستان نے پنجاب میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز کے خلاف رمضان شوگر ملزکے ساتھ بنائے جانے والے سیوریج کی سکیم اور پل تعمیر کروانے کے خلاف احتساب عدالت میں ریفرنس دائر کرنے کا اصولی فیصلہ کیا ہے۔

حمزہ شہباز شریف پر الزام ہے کہ انہوں نے چینوٹ میں واقع اپنی رمضان شوگر ملز کی ناقص آب کے لیے حکومتی خرچے پر سیوریج دلوایا بلکہ 3 ارب روپے کی لاگت سے ایک پل بھی تعمیر کروایا جس کا مقصد رمضان شوگر ملز میں آنے والے گنے کے ٹرکوں اور ٹریکوں کو سہولت فراہم کرنا تھا۔ 

حمزہ پر آمدنی سے زیادہ اثاثوں کے حوالے سے نیب میں تحقیقات جاری ہے مگر بتایا گیا ہے کہ نیب پہلے صرف سرکاری خرچے پر تعمیر کیے جانے والے سیوریج کا نظام اور پل کے حوالہ سے ریفرنس دائر کرے گا۔ 

ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ نیب نے یہ بھی فیصلہ کیا ہے کہ حمزہ شہباز شریف کو فوری گرفتار نہیں کیا جائے گا۔ 

You might also like