دورہ پاکستان، سری لنکن کھلاڑیوں کو منانے کی کوششیں تیز

سری لنکا ٹیم کے 9 کھلاڑیوں کے دورہ پاکستان سے انکار کے بعد پی سی بی نے کرکٹ سری لنکا سے رابطہ کیا ہے

دورہ پاکستان کے لئے سری لنکن ٹیم کے کھلاڑیوں کو ماننے کی کوششیں تیز کر دی گئی ہے۔ سری لنکن وزیرکھیل اپنے کرکٹرز سے ملاقات کرکے انہیں قائل کرینگے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق پاکستان نے سری لنکن ٹیسٹ کپتان دیموتھ کرونا رتنے، فاسٹ باؤلر لسیتھ ملنگا، آل راؤنڈر انجیلو متھیوز سمیت دیگر 9 کھلاڑیوں کے دورے سے انکار کے بعد پی سی بی نے کرکٹ سری لنکا سے رابطہ کیا ہے تاکہ باہمی سیریز پر چھائے خدشات کے بادل ختم کئے جا سکیں اور سری لنکن وزیر کھیل ہرین فرنینڈو پر بھی مقابلوں کو یقینی بنانے کیلئے اپنا کردار ادا کرنے پر زور دیاگیا ہے۔

سری لنکن بورڈ میں ایک تجویز یہ بھی سامنے آئی ہے کہ اگر سینئر کھلاڑی دورے پر نہیں جاتے ہیں تو ان کی جگہ دوسرے کھلاڑیوں کو موقع دیا جائے گا۔ پی سی بی ذرائع کے مطابق کرکٹ سری لنکا دورے کیلئے جیسی بھی ٹیم منتخب کر کے بھیجے گی اس کو کھلے دل کے ساتھ قبول کیا جائے گا تاہم باہمی سیریز کیلئے زیادہ وقت نہ بچنے پر بورڈ کو فکر لاحق ہوگئی ہے کیونکہ محدو د وقت میں لاجسٹک، انتظامی اور دیگر معاملات نمٹانے ہوں گے۔ ذرائع کے مطابق سری لنکن بورڈ کی جانب سے سینئر کھلاڑیوں کے انکار سے متعلق کوئی باضابطہ بیان جاری نہیں کیا گیا ہے تاہم دورے کے حوالے سے صورتحال آج واضح ہو جائے گی۔

پی سی بی ذرائع کے مطابق تکنیکی طور پر کھلاڑیوں کو دورہ پاکستان پر قائل کرنا کرکٹ سری لنکا کا اندرونی معاملہ ہے لہٰذا اس معاملے پر آفیشل بیان نہیں دے سکتے۔ دونوں ٹیموں کے مابین باہمی سیریز کا آغاز 25 ستمبر سے ہونا ہے اور سری لنکن کھلاڑیوں کے انکار کے باوجود کراچی اور لاہور میں باہمی میچوں کی میزبانی کیلئے بھرپور انداز میں تیاریاں جاری ہیں۔ اطلاعات کے مطابق سری لنکا کے سینئر پلیئرز دیموتھ کرونا رتنے، لسیتھ ملنگا اور انجیلو میتھیوز سمیت دیگر کھلاڑیوں نے اہلخانہ کی جانب سے سکیورٹی کو جواز بنا کر پاکستان کا دورہ کرنے سے انکار کر دیا ہے۔

شاید آپ یہ خبریں بھی پسند کریں

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept